Slideshow Image Script

 

Lahore

کرپشن کا قلع قمع کئےبغیر چین سےنہیں بیٹھیں گے: شہباز شریف خان صاحب جلد مستقل ویزےپر باہر جانےوالےہیں، مریم اورنگزیب کی پیشگوئی عمران کےپی کےمیں تو کچھ کر نہ پائے، وزیر اعظم کا مقابلہ کیسےکریں گے؟ امیر مقام ہمیں بڑی سزا مل چکی ہی، امریکیوں کو بھی سزا ملنےکی ضرورت ہی: عمران خان امید ہےپاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ جلد بحال ہو گی: جائلز کلارک غیرملکیوں کےانخلاءتک مردم شماری ملتوی کی جائی: حاصل بزنجو یوم کرپشن میں کمی، ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل کےانڈیکس میں پاکستان 116 ویں نمبر پر آگیا وزیراعظم نےبھارتی فلمیں دکھانےکی منظوری دےدی برطانیہ اورترکی میں سوملین پاونڈ کا دفاعی معاہدہ طےپاگیا سعودی عرب: مزید چھ افراد میں مہلک وائرس کی تصدیق
اہم ترین
تازہ ترین بلاگ
 
مزید بلاگ تحریر کریں
Subscribe Your Email
Email:
Visit this group

 

 

ہیڈ لائن   
کرپشن کا قلع قمع کئےبغیر چین سےنہیں بیٹھیں گے: شہباز شریف

لاہور: (یو پی آئی ) وزیر اعلیٰ سےکرپشن کےخاتمےکےحوالےسےموثر خدمات انجام دینےوالےسرکاری افسران نےملاقات کی۔ اس موقع پر شہباز شریف کا کہنا تھا کہ کرپشن ختم کرنےمیں کردار ادا کرنےوالےسرکاری افسران کا کردار قابل تعریف ہی، کرپشن کا قلع قمع کئےبغیر چین سےنہیں بیٹھیں گی۔ انہوں نےمزید کہا کہ جب نیت صاف ہو تو مشکل ترین حالات میں بھی کامیابی مل سکتی ہی۔اس سےقبل ترک وزارت صحت کےڈائریکٹر جنرل برائےیورپی یونین و بین الاقوامی امور ڈاکٹر اونر گنر نےبھی وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف سےملاقات کی اور پنجاب میں ہیلتھ کیئر سسٹم میں بہتری پر تبادلہ خیال کیا۔
وزیراعلیٰ محمدشہبازشریف کاکہناہےکہ وہ عام آدمی کو معیاری طبی سہولتوں کی فراہمی تک چین سےنہیں بیٹھیں گی،ہیلتھ کیئر سسٹم کو عوام کی توقعات کےمطابق بنایاجائیگا۔ دھرنا گروپ اورکرپشن زدہ سابق حکمرانوں نےملک کا بیڑا غرق کرنےمیں کوئی کسر نہیں چھوڑی۔ترک وزارتِ صحت کےوفدنےلاہورمیں وزیراعلیٰ پنجاب سےملاقات کی۔اس موقع پر شہبازشریف کاکہناتھاکہ وہ ہیلتھ کیئر سسٹم کی بہتری میں ترکی کےتعاون کو قدر کی نگاہ سےدیکھتےہیں۔ترک وفد کےسربراہ ڈاکٹر اونر گنر نےکہاکہ وہ ہیلتھ کیئرسسٹم کی بہتری کےلئےتعاون جاری رکھیں گی۔بعد میں وزیراعظم کےسابق مشیرامیربخش بھٹونےوزیراعلیٰ پنجاب سےملاقات کی،اس موقع پر وزیر اعلیٰ کاکہناتھا کہ وسائل کی لوٹ مار اوردھرنوں کےذریعےترقی کےسفر میں رکاوٹیں کھڑی کرنیوالوں نےعوام سےدشمنی کی،گزشتہ ساڑھی3سال کےدوران دھرنا گروپ نےالزامات ، بہتان تراشی اورجھوٹ بولنےکےسواکچھ نہیں کیا۔وزیراعلیٰ پنجاب نےبغیرسیکورٹی تحصیل ہیڈکوارٹر اسپتال رائیونڈکااچانک دورہ بھی کیا۔انتظامیہ بھی وزیراعلیٰ کےاچانک دورےسےلاعلم تھی۔وزیراعلیٰ نےصفائی معیار کےمطابق نہ ہونےپرسخت ناراضگی کا اظہارکیا۔وزیر اعلیٰ وارڈز میں بجلی کےبیک اپ ہیٹر نہ ہونےپر شدید برہم ہوئے،ان کا کہنا تھا کہ ایم ایس کےدفتر میں بجلی کا ہیٹر موجود ہواوروارڈز میں نہ ہونا افسوسناک ہی۔اس موقع پر مریضوں اوران کےلواحقین نےاسپتال میں ادویات کی فراہمی پراطمینان کااظہار کیا اور شکایات بھی لگائیں۔
تازہ ترین کالم
مزید کالم
اداریہ
مزید اداریہ
FOLLOW US ON
ڈائون لوڈ کریں
JOB APPLICATION
POLICE CLEARANCE
CHARECTER CERTIFICATE
COMPANY PROFILE
سندھ حکومت کو تیس دن کا الٹی میٹم دیتےہیں، مصطفیٰ کمال
کراچی:(یو پی آئی) سربراہ پاک سرزمین پارٹی مصطفیٰ کمال نےسندھ حکومت سے9 مطالبات کےحل لیے30 دن کا الٹی میٹم دیتےہوئےکہا کہ اگر مطالبات منظور نہ ہوئےتو آئندہ کا لائحہ عمل طےکریں گےاور آج کےجلسےنےاردو بولنےوالوں کےبارےمیں بیانیہ تبدیل کردیا ہی، کراچی والوں نےبانی ایم کیو ایم اور ایم کیو ایم سےتعلق توڑ دیا ہی۔تبت سینٹر پر جلسہ عام سےخطاب کرتےہوئےمصطفیٰ کمال نےکہا کہ جو لوگ ایم کیو ایم کو زندہ رکھنا چاہتےہیں وہی مہاجروں کےسب سےبڑےدشمن ہیں، ہم دو لوگوں نےآکر گمشدہ لوگوں کےلیےآواز اٹھائی اور انہیں بازیاب کروایا جب کہ جو لوگ کہتےتھےایم کیو ایم تقسیم نہیں ہوگی وہ آج دیکھی لیں۔انہوں نےاپنےماضی پر عوام سےمعافی اور مانگی اور بانی تحریک کو سپورٹ کرنےکی غلطی کا اعتراف کرتےہوئےکہا کہ حکومت پاکستان اور اداروں کےذہنوں میں یہ بات بٹھائی گئی کہ اگر ایم کیو ایم نہیں ہوگی تو کراچی غیر مستحکم ہوگا، مہاجر علیحدگی چاہتےہیں مگر آج عوام نےایسےتمام لوگوں کےدعووں کو مسترد کردیا۔مصطفیٰ کمال نےکہا کہ کراچی کےمینڈیٹ کا دعویٰ کرنےوالےشہر سےکچرا نہیں اٹھا رہی، شہر میں پیدا ہونےوالی بجلی کا 20 فیصد حصہ بھی کراچی کو نہیں دیا جاتا، شہر میں جگہ جگہ کچرےکا ڈھیر ہےاور پانی کی فراہمی نہیں کی جارہی۔مصطفیٰ کمال نےحکومت پر تنقید کرتےہوئےکہا کہ بچےبھوک اور پیاس سےمررہےہیں مگر ہم سی پیک کا راگ الاپ رہےہیں، پاک سرزمین پارٹی عوام کو ان کےحقوق دلوانےتک چین سےنہیں بیٹھےگی، جو لوگ ایم کیو ایم کو چھوڑی ٹانگوں سےزندہ رکھنا چاہتےہیں وہی مہاجروں اور کراچی کےعوام سےدشمنی کررہےہیں۔پاک سرزمین پارٹی کےسربراہ کا کہنا تھا کہ مجھ پر اسٹیبلشمنٹ کا آدمی ہونےاور ان کی مدد فراہم کرنےکا الزام لگایا جاتا ہےتو ہاں میں کہتا ہوں کہ اسٹیبلشمنٹ کا حصہ ہوں اور میری اسٹیبلشمنٹ اللہ کی اسٹیبلشمنٹ ہی۔انہوں نےجلسےکےشرکاءکو مخاطب کرتےہوئےکہا کہ آپ لوگوں بڑی تعداد میں جلسےمیں شرکت کر کےبڑےبڑےبتوں کوتوڑ دیا تم نیجھوٹ کا پرچار کرنیوالوں کیمنہ سےنقاب چھین لیا ہی۔ مصطفیٰ کمال نےکہا کہ سیوریج کانظام درہم برہم ہی، اسپتالوں میں دوائیں نہیں، سڑکیں ٹوٹی پھوٹی ہوئی ہیں اور اسکولوں میں تعلیم نہیں دی جا رہی ہےاس کےلیےہم 2018 تک کا انتظار نہیں کر سکتےاس لیےآج قرارداد کی صورت میں اپنا لائحہ عمل دےرہےہیں جس پر عمل در آمد کےلیےحکومت کو تیس دن کا وقت دیتا ہوں۔اس مو قع پر پاک سرزمین پارٹی کےوائس چیئرمین رضا ہارون نےجلسہ کےشرکائ کےسامنےسےقراردادیں پیش کرتےہوئےمقامی حکومتوں کو مالی اور انتظامی اختیارات دینےکا مطالبہ کیا اس کےعلاوہ ٹرانسپورٹ کےبہتر نظام، پینےکا صاف پانی ، صفائی ستھرائی اور کرپشن کےخاتمےسمیت سات مطالبےرکھےجسےعوام نےمتفقہ طور پر منظور کر لیی۔سربراہ پاک سرزمین پارٹی نےقراردادوں میں ایک قرار داد کا اضافہ کرتےہوئےمطالبہ کیا کہ کراچی میں 4 اور حیدرآباد میں 2 کیڈٹس کالجز کےقیام کا بھی مطالبہ کیا۔ بعد ازاں مصطفیٰ کمال نےقراردادوں کی منظوری کےبعد کہا کہ اپنےمطالبات کےلیےوزیراعلیٰ سندھ کو تیس دن کا وقت دیتا ہوں جب کہ میئر کراچی اور منتخب نمائندوں سےکہتا ہوں کہ اگر اختیارات نہیں ہیں تو استعفیٰ دےدیں۔ آخر میں مصطفیٰ کمال نےجلسےکےشرکاء سےحکومت کو دیےجانےوالےایک ماہ کےالٹی میٹم کےپورےہونےکےبعد کےلائحہ عمل کےلیےتیار رہنےکا وعدہ لیا اور اپنےمطالبات کےحصول کےلیےمتحرک رہنےکی ہدایات جاری کیں۔
خان صاحب جلد مستقل ویزےپر باہر جانےوالےہیں، مریم اورنگزیب کی پیشگوئی

اسلام آباد: (یو پی آئی) وزیر مملکت برائےاطلاعات و نشریات مریم اورنگزیب نےتحریک انصاف کےساہیوال میں ہونےوالےجلسےکےحوالےسےکپتان سےطنزیہ استفسار کیا ہےکہ عمران خان صاحب! یہ جلسہ ہےیا کارنر میٹنگ؟ وزیر مملکت نےچیئرمین پی ٹی آئی کو ایک پیشکش بھی کر ڈالی، کہتی ہیں خان صاحب! اگر لوگ اکٹھےکرنےمیں مشکل ہو رہی ہےتو خواجہ آصف اور خواجہ سعد رفیق کو آپ کی مدد کےلئےبھیج سکتےہیں۔انہوں نےدعویٰ کیا کہ خان صاحب جلد مستقل ویزےپر باہر جانےوالےہیں۔ مریم اورنگزیب نےعمران خان کو مخاطب کرکےکہا کہ خان صاحب آپ شائد کےپی کےمیں سرکاری نوکری بکنےکا ذکر کر ر ہےہیں، آپ کو اپنےملک کی قدر کب ہو گی؟ آپ کہتےہیں کہ انگلستان نےمجھےکرکٹر بنایا، آپ کو یہ خدشہ ہےکہ اب کسی اور ملک کا ویزہ نہیں ملےگا۔مریم اورنگزیب نےسوال کئےکہ کےپی کا صحت اور تعلیم کا نظام کون ٹھیک کرےگا؟ کےپی کےاحتساب کمیشن کو تالا لگایا گیا، وہاں کا انصاف کا نظام کون ٹھیک کرےگا؟

****

عمران کےپی کےمیں تو کچھ کر نہ پائے، وزیر اعظم کا مقابلہ کیسےکریں گے؟ امیر مقام
متنی: (یو پی آئی) وزیر اعظم کےمشیر انجینئر امیر مقام نےجلسےسےخطاب کرتےہوئےسوال کیا کہ کنٹینر خان کی تبدیلی کہاں ہی؟ انہوں نےدعویٰ کیا کہ خیبر پختونخوا کےعوام نےتو عمران خان کو مسترد کر دیا، وہ نواز شریف سےمقابلہ کیسےکریں گی؟ امیر مقام نےالزام عائد کیا کہ عمران خان کا وزیر اعلیٰ ڈانس اور سازشوں میں نمبر ون ہی۔ انہوں نےمزید کہا کہ اگر میرا قائد مجھےاجازت دےتو عمران خان کےپی میں قدم بھی نہ رکھ سکیں۔ انہوں نےیہ بھی کہا کہ عمران خان کی سیاست انتشار کی سیاست ہی۔لیگی رہنماوں نےاستفسار کیا کہ عمران نےڈیمز بنانےکا اعلان کیا تھا، وہ ڈیم کدھر گئی؟ انہوں نےمزید کہا کہ عمران خان کےوزیر خزانہ تو خیبر بینک فراڈ کا جواب نہیں دےسکی، علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی میں اڑھائی سالہ بی ایڈ پروگرام متعارف

****

ہمیں بڑی سزا مل چکی ہی، امریکیوں کو بھی سزا ملنےکی ضرورت ہی: عمران خان

ساہیوال :(یو پی آئی) چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کا کہنا ہےکہ جھوٹ کےجتنےریکارڈ نوازشریف نےقائم کئےکسی نےنہیں کیےوزیراعظم ملک سےباہر اربوں روپےکی جائیداد خریدتےہیں، وزیراعظم کےبچےباہر ہیں، وہ اپنا علاج بھی باہر سےکراتےہیں۔وہ ساہیوال میں ایک بڑےجلسہ عام سےخطاب کر رہےتھےانہوں نےکہا کہ پاکستان کا سب سےبڑامسئلہ حکمرانوں کی کرپشن ہی، پیسہ باہر لےجانیوالےوزیروں کی وجہ سےدنیا میں ذلت ملتی ہےپاناماکیس میں پہلی بارحکمرانوں کی تلاشی لی جارہی ہی۔عمران خان نےکہا کہ کرپشن مافیاہرجگہ بیٹھاہی،ہمیں ان کو شکست دینی ہی، آخری سانس تک ان کا مقابلہ کرونگا پاناماکیس کافیصلہ کچھ بھی ہو پاکستان ہی جیتےگا جب تک کرپشن کاپیسہ باہرجائےگاقرضےبڑھتےجائیں گی۔انہوں نےکہا کہ دعویٰ کرتاہوں پاکستان ایک عظیم ملک بن سکتا ہےپاکستان کےعوام ملک کاسب سےبڑا اثاثہ ہیں ہمیں وہ قوم بنناہےجس کےلیڈرمحمد علی جناح تھی،قائداعظم کےدشمن بھی ان کی دیانتداری پرشک نہیں کرتےتھی۔چیئرمین تحریک انصاف نےکہا کہ امریکامیں حجاب پہننےوالی لڑکی پر امریکی شہری نےتشددکیا اور اسلام کےخلاف نازیبا ذبان استعمال کی لیکن ہمارےحکمرانوں کےکانوں پر جوں تک نہ رینگی دوسری جانب سنا ہےکہ اب پاکستانیوں کوامریکاکاویزانہیں مل پائیگا، دعا ہےامریکی صدرٹرمپ حقیقی معنوں میں ہمارےویزےروک دیں۔انہوں نےکہا کہ ویزےپرپابندی لگ گئی توہمیں اپنےگھرکوٹھیک کرناپڑیگا ہمیں بڑی سزامل چکی ہی،امریکیوں کوبھی سزاملنےکی ضرورت ہی، تحریک انصاف کی حکومت آئی تو ہم ہم امریکا یا آئی ایم ایف سےقرضہ نہیں لیں گےبلکہ ملک کو اپنےپاوں پر کھڑا کریں گی۔سربراہ تحریک انصاف نےکہا کہ پاکستانی کسانوں کی مددکی جائےتوزراعت میں اضافہ ہوگا ہم نےگورنمنٹ اسکولوں میں غریب بچوں کوانگریزی تعلیم دیناشرع کی اسپتالوں میں ایک نیا نظام لارہےہیں اوران کااسٹرکچرتبدیل کردیاہےسارےپاکستان میں پختونخواکےاسپتال مثال بنیں گی۔

****

غیرملکیوں کےانخلاءتک مردم شماری ملتوی کی جائی: حاصل بزنجو
اسلام آباد: (یو پی آئی) وفاقی وزیر میر حاصل بزنجو کی جانب سےنیا پنڈورا باکس کھولنےکی کوشش کی گئی ہی۔ وزیر باتدبیر نےمطالبہ کیا ہےکہ بلوچستان اور خیبر پختونخوا سےغیرملکیوں کےانخلاءتک مردم شماری ملتوی کر دی جائی۔ وفاقی وزیر نےاعلان کیا ہےکہ وہ اپنےمطالبےکو منوانےکیلئےسپریم کورٹ آف پاکستان کا دروازہ بھی کھٹکھٹائیں گی۔انہوں نےدعویٰ کیا کہ خیبر پختونخوا حکومت بھی مردم شماری کےحق میں نہیں ہی۔ وفاقی وزیر نےمعاملےکو سینیٹ اور قومی اسمبلی میں اٹھانےکا اعلان بھی کر دیا تاہم انہوں نےواضح کیا کہ اب تک مردم شماری کےبائیکاٹ کا فیصلہ نہیں کیا۔
علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی میں اڑھائی سالہ بی ایڈ پروگرام متعارف
اسلام آباد: (یو پی آئی) نئےسمسٹر میں علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی نےگریجویٹ طلبہ کےلئےڈھائی سالہ بی ایڈ پروگرام متعارف کر دیا ہےجبکہ ایف اےاور ایف ایس سی طلبہ کےلئےچار سال اور ایم ای/ ایم ایس سی طلبہ کےلئےپی ایڈ پروگرام کا دورانیہ اڑھائی سال مقرر ہی۔ تمام پروگراموں کےداخلہ فارم اور پراسپیکٹس یکم فروری سےاسلام آباد میں یونیورسٹی کےمین کیمپس کےسیل پوائنٹس اور ملک بھر میں موجود علاقائی کیمپسسز اور رابطہ دفاتر سےحاصل کئےجا سکیں گی۔ راسپیکٹس سیل پوائنٹس ہفتہ اور اتوار کےروز بھی صبح 8 بجےسےشام 6 بجےتک کھلےرہیں گی۔ میٹرک سےپی ایچ ڈی تک تمام پروگرامز کےپراسپیکٹس اور داخلہ فارم یونیورسٹی کی ویب سائٹ www.aiou.edu.pk سےڈآن لوڈ بھی کئےجا سکیں گی۔داخلہ فارم اور مقررہ فیس نامزد کردہ برانچوں میں جمع کرائےجا سکیں گی۔ نامزد شاخوں کی تفصیلات پراسپیکٹس، یونیورسٹی کی ویب سائٹ اور اوپن یونیورسٹی کےعلاقائی دفاتر سےدستیاب ہوں گی۔ کسی بھی پروگرام میں پہلےسےجاری طلبہ کو کمپیوٹرائزڈ داخلہ فارم بھجوا دیےگئےہیں۔ اگر کسی طالب علم کو داخلہ فارم موصول نہ ہو تو وہ یونیورسٹی کی ویب سائٹ www.aiou.edu.pk سےڈآن لوڈ کرکےیا میٹرک کا پراسپیکٹس لےکر اپنا داخلہ فارم کسی بھی بینک کی نامزد برانچ میں داخلہ فیس کےہمراہ مقررہ تاریخ تک جمع کروا کر اضافی لیٹ فیس کی ادائیگی سےبچ سکتا ہی۔
آپریشنل نیٹ ورک

d
M ASLAM MIAN
CHIEF EDITOR

 

 


SHAHID RIZVI
News EDITOR

 

 


NAZIR KHALID
CHIEF REPORTER

 

 

 


JAMIL SIRAJ
SPORTS EDITOR

BUREAU CHIEF

SYDNEY AUSTRALIA



JAMAL JATOI
BUREAU CHIEF KARACHI

 

 


ABDUL WAHID
STAFF REPORTER

 

 

 

کیلنڈر
Copyright 2010 UPI(United Press International)